آم کے’ معجزاتی‘ پتوں سے شوگر کا علاج -آم کے پتوں میں پکٹن اور وٹامن سی کی بھاری مقدار پائی جاتی ہے۔

  • Posted by Mian Zahoor ul Haq
  • at 7:26:00 AM -
  • 0 comments
خاموش اور خطرناک بیماری شوگر سے بہت سے لوگ پریشان ہیں اور ادویات کے استعمال سے تنگ آ چکے ہیں، شوگر کا علاج آم کے پتوں سے بھی کیا جا سکتا ہے۔
آم کے پتوں میں قدتی طور پر ’ منگفرین ‘ پائے جانے کے باعث انزائم ’الفا گلوکوسیڈیس‘ کو روکنے میں مدد ملتی ہے جس کے باعث انسانی جسم میں کاربوہائیڈریٹس کو زائل ہونے میں مدد ملتی ہے، نضامِ ہاضمہ تیز ہوتا ہے اور خون میں شوگر کی مقدار متوازن رہتی ہے۔
دہائیوں پرانے چینی طریقے سے جاری دمے اور شوگر کے علاج میں استعمال ہو نے والے آم کے پتوں سے انسولین کی مناسب مقدار بننے اور گلوکوز کو صحیح طریقے سے استعمال ہونے میں مدد ملتی ہے، اس میں بھاری مقدار میں پیکٹن اور و ٹامن سی پائے جانے کی وجہ سے کولیسٹرول اور شو گر لیول بھی متوازن رہتا ہے رات کو بار بار پیشاب کا آنا، آنکھوں کے دھندلے پن سے بھی نجات ملتی ہے۔
م کے پتوں کو معجزاتی پتے بھی کہا جاتا ہے،  اینٹی آکسیڈنٹ جز پائے جانےکی وجہ سے آم کے پتے جسم سے فاضل مادے زائل کرنے میں بھی مدد فراہم کرتے ہیں۔
10 سے 15 آم کے پتوں کو پانی میں ابال لیں، رات بھر کے لیے ڈھانپ کر چھوڑ دیں، صبح پتے چھان کر نہار منہ یہ پانی پئیں، آم کے پتوں کا استعمال بالکل محفوظ ہے جس کا کوئی نقصان نہیں، اس کے روزانہ استعمال سے چند مہینوں میں شوگر لیول متوازن اور بہترین نتائج حاصل ہوں گے۔
م کے پتوں کے استعمال کے دوران کھانے پینے کا بھر پور خیال رکھیں ۔
مرغن اور میٹھی چیزوں سے پر ہیز کریں۔
روزانہ کی بنیاد پرچہل قدمی یا مکمل ورزش کریں۔
ڈاکٹر کی ہدایات پر عمل کریں۔
Source-

Author

Written by Admin

Aliquam molestie ligula vitae nunc lobortis dictum varius tellus porttitor. Suspendisse vehicula diam a ligula malesuada a pellentesque turpis facilisis. Vestibulum a urna elit. Nulla bibendum dolor suscipit tortor euismod eu laoreet odio facilisis.

0 comments: